Khateeb Rafathullah Rafath …… ghazal

khateeb-rafathullah-rafath-ghazal

کون کہتا ہے جہانِ رنگِ بو اک راز ہے
در حقیقت یہ کسی کی جلوہِ گاہِ ناز ہے
ْ کون آتا ہے یہ کس کے چلنے کی آواز ہے
ہر صدائے پا میں جس کی سو طرح کا ناز ہے
ہر روش پامال ہوتی ہے جُھلستے ہیں شجر
غنچہ غنچہ گلستاں کا مستِ خوابِ ناز ہے
ٹوٹنے کو ہے کوئی دم میں طلسمِ کفر و شر
راہِ حق کا ہر سپاہی ضیغمِ جا ں باز ہے
دعوتِ حق سے ہے نامانوس کیوں عصرِ رواں
یہ تو ہر اک دور میں گونجی ہوئی آواز ہے
ہے یہ فیضانِ خودی جس کے اثر سے مشتِ خاک
خود شناس و خود فراز و خود گر و خود ساز ہے
عزمِ راسخ کا کرشمہ ہے یہ رفعتؔ بالیقین
طائرِے بے بال و پر جو ما ئلِ پرواز ہے

kon khta hay jhanah rangah bo ik raz hay
dr hqyqt yeh ksi ki jlohah gahah naz hay
kon aata hay yeh kis kay chlnay ki aaoaz hay
hur sdaaey pa mein jis ki so trh ka naz hay
hur rosh pamal hoti hay juhlstay hain shjr
ghnchah ghnchah glsta’n ka mstah khoabah naz hay
ToTnay ko hay koaii dm mein tlsmah kfr V shr
rahah hq ka hur spahi zeghmah ja ‘n baz hay
d’otah hq say hay namanos keo’n Asrah roa’n
yeh to hur ik dor mein gonji hoaii aaoaz hay
hay yeh fezanah khodi jis kay asr say mshtah khak
khod shnas V khod fraz V khod gr V khod saz hay
Azmah raskh ka krshmah hay yeh rf’tؔ balyqyn
taairiay bay bal V par jo ma ailah proaz hay

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *