Shahida Urooj Khan – ghazal

Shahida Urooj Khanعجیب ہے یہ ماجرا ، یہ حسن ِ اتفاق ہے
وہ میرا کیوں نہ ہوسکا یہ حسن ِ اتفاق ہے
اگر کسی کو دل میں جب بسائیں تو یہ سوچ لیں
کہ نکلے گا وہ بے وفا یہ حسن ِ اتفاق ہے
کوئی تو آُکے یہ کہے ملا ہے اس کو یہ صلہ
وہ کون ہے بنا مرا یہ حسن ٰ اتفاق ہے
کبھی کبھی خیالوں میں جو خود سے لڑتی رہتی ہوں
ہے چاہتوں کا سلسلہ یہ حسن ِ اتفاق ہے
بہت عجیب ہیں یہ سب محبتوں کے سلسلے
وہ آُکے دل میں بس گیا یہ حسن ِ اتفاق ہے
دل و نظر کے ، میں اسے سلام روز کرتی ہوں
وہ جب سے میرا بن گیا یہ حسن ِ اتفاق ہے
عُروج کیا ہوا تمہیں خبر نہ لی مری کوئی
کہ ہوگئے ہو بے وفا یہ حسن ِ اتفاق ہے۔۔۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *